’’سیرتِ رسولؐ کی روشنی میں سماجی انصاف اورعمدہ حکمرانی‘‘


پامیر ٹائمز اردو

(یہ مقالہ شیعہ امامی اسماعیلی طریقہ اینڈ ریلیجس ایجوکیشن بورڈ برائے پاکستان‘فیسلیٹینگ کمیٹی گلگت بلتستان کی طرف سے منعقدہ سیمینار’’سیرت النبی صلی اللہ علیہ وسلم کی روشنی میں سماجی انصاف اور عمدہ حکمرانی‘‘ 9جون2013 کوسیرینا ہوٹل گلگت میں پڑھا گیا۔(ادارہ)

سماج کا مفہوم:۔عربی زبان میں سماج کا معنی ’’معاشرہ ‘‘ اور انگریزی میں ’’Society‘‘کے ہیں۔ جو باب تفاعل عاشر یعاشر سے اسم فاعل کا صیغہ ہے جس کے معنی باہم مل جل کررہنا ‘جیسے’’اعتشریا تعاشرالقوم‘‘ ایک دوسرے کے ساتھ رہنا(۱)۔انگریزی میں

Social mode of living, A social community.

مثال کے طور پر

Society has a right to expect peaple to obey tha law”.(2) ”

سماج کی تعریفیں مختلف مفکرین نے کی ہے جن میں سے ایک دو کی تعریفیں ہم یہاں نقل کرتے ہیں تاکہ آگے سماجی انصاف اور عمدہ حکمرانی {Social justice and Good governance} جو کہ مقالے کا عنوان ہے کو درست طریقے سے سمجھ سکیں۔ رالف لنٹن(Ralphlinton) نے…

View original post 6,028 more words

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s